کشمیر

جامعات نوجوانوں کی درست سمت میں تربیت کریں،صدرمسعود

مظفرآباد:آزاد جموں و کشمیر کے صدر سردار مسعود خان نے آزاد کشمیر کے سرکاری شعبے میں قائم جامعات پر زور دیا ہے کہ وہ نوجوانوں کی ذہن سازی اس انداز میں کریں کہ وہ عالمگیریت کے اس دور میں تنگ نظری، علاقائی اور قبیلائی ازم کی سوچ کو ترک کر کے قومی اور بین الاقومی ذمہ داریوں کو ادا کرنے کے قابل بن سکیں۔ آج کے نوجوان اپنے گھر کے قریب تعلیم حاصل کر کے وہاں پر ہی ملازمت حاصل کرنے کو اپنا حق سمجھتے ہیں اور یوں وہ علاقائی حد بندیوں کا قیدی بن کر وسعت نظر اور آفاقی سوچ سے محروم ہوتے جا رہے ہیں۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے آزاد جموں و کشمیر یونیورسٹی کے زیر اہتمام اس مادر علمی کے سابق وائس چانسلرز حضرات کی تعلیمی خدمات پر انہیں خراج تحسین پیش کرنے کے حوالے سے منعقدہ ایک تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ ”ایک شام سابق وائس چانسلرز کے نام” کے عنوان سے ہونے والی اس تقریب سے جامعہ کشمیر کے وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر کلیم عباسی، سابق چیف جسٹس و سابق وائس چانسلر منظور الحسن گیلانی، سابق وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر دلنواز احمد گردیزی، سابق وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر غلام غوث، وویمن یونیورسٹی باغ کے سابق وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر حلیم خان، سابق وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر منظور حسین، سابق وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر خواجہ فاوق احمد نے بھی خطاب کیا جبکہ میرپور یونیورسٹی آف سائنس اینڈ ٹیکنالوجی کے وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر مقصود احمد، وویمن یونیورسٹی باغ کے سابق وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر عبدالحمید، سیکرٹری تعلیم زاہد حسین عباسی، کمشنر راولاکوٹ مسعود الرحمان، جامعہ کے ڈین حضرات ، شعبہ جات کے سربراہان، فیکلٹی ممبران کی بڑی تعداد نے بھی شرکت کی۔

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close