کشمیر

کوئی بھی ہماری حکومت کی کارکردگی کا مقابلہ نہیں کر سکتا،فاروق حیدر

مظفرآباد:وزیر اعظم آزادجموں وکشمیر وصدر مسلم لیگ ن راجہ محمد فاروق حیدرخان نے کہا ہے کہ گزشتہ چار سالوں میں آزادکشمیر میں ہونے والی تبدیلی زمین پر نظرآرہی ہے ، کوئی بھی ہماری حکومت کی کارکردگی کا مقابلہ نہیں کر سکتا۔ تعمیر وترقی، گڈگورننس ، تعلیم ، صحت سمیت ہر شعبے میں واضح تبدیلی نظرآرہی ہے ۔ کسی کو اختیار نہیں کہ وہ اپنے آپ کو رازق کہے ، رزق اللہ رب العزت کی ذات نے دینا ہے ۔ مسلم لیگ ن کی حکومت نے غریب اور سفید پوش کو اہلیت اور صلاحیت کی بنیاد اس کا حق دیا، نائب قاصد سے لیکر گریڈ14تک تمام محکمہ جات کی تقرریاں بذریعہ این ٹی ایس کرینگے۔ہم نے صرف اعلانات نہیں کیے بلکہ عملی اقدامات اٹھائے۔ہمارے اقدامات کی وجہ سے حقدار کو اس کا حق ملا اور لوگوں کا سسٹم پر اعتماد بحال ہوا ۔ حکومت کی چار سالہ کارکردگی کا کریڈیٹ پارلیمانی پارٹی کو جاتا ہے ۔ تبدیلی کے نعرے لگانے والوں نے ہر پانچ سالہ دور میں جماعتیں تبدیل کیں ۔ آزادکشمیر حکومت کے اختیارات میں اضافہ کیا گیا جس کی وجہ سے کئی دہائیوں سے زیر التواء مسائل حل ہوئے۔ محمد نواز شریف کے احسانات کی بدولت آزادکشمیر میں تعمیر وترقی کا نیا دور شروع ہوا ، نواز شریف نے بطور وزیر اعظم آزادکشمیر کے مسائل پر پانچ گھنٹے طویل اجلاس منعقد کرکے ہمارے مسائل سنے ۔ شاہد خاقان عباسی کا شکرگزار ہوںکہ انہوںنے بھی ہمارے اوپر بہت احسانات کیے ۔ ہماری حکومت نے ریاست آمد ن میں اضافہ کیا، فیڈرل ٹیکسز شرح کو2.4فیصد سے بڑھا کر3.6فیصد تک لیجایا گیا جس سے ہمیں اس سال ہمیں70ارب روپے ملنے تھے لیکن حکومت پاکستان نے 55ارب کی رضا مندی دی ہے ۔موجودہ حکومت پاکستان نے انتظامی بجٹ پر 15ارب روپے کی کٹ لگائی جس کے باعث تنخواہوں میں اضافے سمیت دیگر اقدامات نہیں اٹھائے۔ ان خیالات کا اظہار انہوںنے ڈنہ کے مقام پر ایک بڑے جلسہ عام سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ قبل ازیں وزیر اعظم راجہ محمد فاروق حیدرخان کا ڈنہ آمد پر شاندار استقبال کیا گیا ، کارکنان نے نعروں کی گونج میں پھولوں کی پتیاں نچھاور کرتے ہوئے قائد کشمیر کو ویلکم کیا۔ وزیر اعظم کے ہمراہ وزیر حکومت راجہ عبد القیوم راجہ ابرار حسین صاحبزادہ محمد سلیم چشتی صاحب و دیگر موجود تھے۔وزیر اعظم راجہ محمد فاروق حیدرخان ڈنہ جلسہ کے مہمان خصوصی تھے۔ جلسہ عام سے وزراء حکومت راجہ عبدالقیوم خان اور ڈاکٹر مصطفی بشیر ، راجہ ابرار حسین ایڈووکیٹ،ڈاکٹر راجہ عارف،راجہ لطیف خان ،راجہ ممتاز ، طارق بشیر، راجہ اورنگزیب ، چوہدری شفقت، ناصر لطیف، آصف بشیر ، راجہ لیاقت ،کاشف مقصود، قاضی ظہیر ایڈووکیٹ،، راجہ شاہنواز ، راجہ عامر ، سمیع بابر ، ودیگر نے بھی خطاب کیا۔ وزیر اعظم نے اپنے خطاب میں کہا کہ ہمارے چار سالہ دور میں آزاد خطہ میں واضح تبدیلی آئے ،ہم نے آزادکشمیر میں فری ایمرجنسی سروسز کا اجراء کیا، این ٹی ایس کے ذریعے اہل لوگوں کو ٹیچر بھرتی کیا جس سے نظام تعلیم میں بہتری آئی ۔ انہوں نے کہاکہ جو کام مسلم لیگ ن کے مقدر میں آئے وہ کسی اور کے حصے میں نہیں آئے ۔ میرٹ کی بحالی اور کرپشن کا خاتمہ مسلم لیگ ن کی حکومت نے کیا۔ غریب والدین کے بچے پبلک سروس کمیشن کے ذریعے اپنی اہلیت اور صلاحیت کی بنیاد پر اعلیٰ عہدوںپرتعینات ہوئے ،غریب والدین جو دہائیوں سے اپنے بچوں کو محنت مزدوری کر کے پڑھا رہے تھے انہیں حق ملا۔ انہوں نے کہاکہ آزادکشمیر کے وقار اور تشخص کو کم نہیں ہونے دیا بلکہ اس میں اضافہ کیا ۔ مظفرآباد میں دل کے ہسپتال کیلئے آسامیوں سمیت ضروری سامان کی منظوری دیدی ہے ، اس پر جلد کام شروع کیا جائے گا ۔ انہوں نے کہاکہ پی پی کی حکومت نے میڈیکل کالجز تو بنائے مگر ہوا میں تھے ہم نے انہیں نارمل میزانیہ پر لایا اور ڈگری کی تصدیق PMDCسے کروائی۔ انہوں نے کہاکہ آزادکشمیر میں اسلام آباد سے سستا آٹا مل رہا ہے ، روزانہ اس پر حکومت1کروڑ35لاکھ روپے حکومت اپنے خزانے سے ادا کرتی ہے ۔ انہوںنے کہاکہ آزادکشمیر کے سیاستدان اس لیے ہمیشہ بدنام رہے کہ اسلام آباد میں آنے والی ہر حکومت کے ساتھ رہے لیکن مسلم لیگ ن کی حکومت نے یہ داغ دھویا۔ انہوںنے کہاکہ ہم مشکل وقت میںمیاں نواز شریف کے ساتھ کھڑے ہیں ۔ وزیر اعظم نے کہا کہ آزادکشمیر میں سرکاری و غیر سرکاری زمین پر قابضین کے خلاف قانون بنایا ہے جس کے تحت مقدمات کا فیصلہ 60دنوں میں ہوگا۔آج پاکستان میں لیڈیز ہیلتھ ورکرز ہڑتال پر بیٹھی ہیں ہم نے 3300لیڈیز ہیلتھ ورکرز کو مستقل کیا، حکومت کا کام لوگوں کو روزگار دیناہے ،مزید لوگوں کو مستقل کرینگے ۔ انہوںنے کہاکہ ٹکٹ کیلئے ہر شخص کو اختیار ہے کہ اپلائی کریں فیصلہ جماعت کے پارلیمانی بورڈ نے کرنا ہے ۔ انہوںنے کہا کہ کارکنان قیادت پر اعتماد رکھیں کسی کے ساتھ ناانصافی نہیں ہوگی۔ ایم ایس ایف این اور یوتھ ونگ کی نئی تنظیم سازی کررہے ہیں ، نئی تنظیم میں نئے لوگ آئیں گے۔ جلسہ عام سے خطاب کرتے ہوئے وزیر اوقاف راجہ عبدالقیوم خان نے کہاکہ مسلم لیگ ن نے آزادکشمیر میں گزشتہ چار سالوں تعمیر وترقی کیلئے انقلابی اقدامات اٹھائے ۔ قائد مسلم لیگ ن محمد نواز شریف نے آزادکشمیر کی ترقی کیلئے وافر فنڈز دیے ۔ انہوں نے کہا کہ گزشتہ چار سالوں میں کھاوڑہ میں 2ارب8کروڑ روپے کے ترقیاتی کام ہوئے جبکہ154کلو میٹر سڑکیں پختہ کی گئیں ۔ انہوں نے کہاکہ کرونا وبا ایک آزمائش ہے۔ حکومت آزادکشمیر نے شہریوں کو بچانے کیلئے پیشگی اقدامات اٹھائے ۔ قائد کشمیر راجہ محمد فاروق حیدرخان جو فیصلہ بھی کرینگے ان کے ساتھ کھڑے ہیں ۔

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close