پاکستان

غریب اور کمزورطبقے کی ضروریات پوری کرینگے،وزیراعظم

اسلام آباد:وزیر اعظم عمران خان کی زیر صدارت غریب اور کم آمدنی والے طبقات کو اشیائے ضروریہ کی مد میں حکومتی سبسڈی کی فراہمی کے نظام کو مزید موثر بنانے کے حوالے سے اجلاس منعقد ہوا۔اجلاس میں معاونِ خصوصی برائے سماجی تحفظ ڈاکٹر ثانیہ نشتر، سیکرٹری خزانہ ، چیئرمین نادرا و دیگر سینئر افسران شریک ہوئے ۔اجلاس میں حکومت کی جانب سے فراہم کی جانے والی سبسڈی کو مستحق افراد تک موثر طریقے سے پہنچانے خصوصاً غربت کا شکار اور کم آمدنی والے طبقات کی بنیادی اشیائے ضروریہ کے حوالے سے سبسڈٰ ی کے نظام کو بہتر بنانے کے ضمن میں مختلف تجاویز پر غور کیا ۔وزیرِ اعظم نے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ کمزور اور غربت کا شکار افراد کی ضروریات کو پورا کرنا ہماری ذمہ داری اور اولین ترجیح ہے۔ انہوں نے کہا کہ حکومت کی بھرپور کوشش ہے کہ سبسڈی کے نظام کو موثر ، شفاف اور ٹارگیٹڈ (اہداف کے مطابق) بنایا جائے اور اس امر کو یقینی بنایا جائے کہ سرکاری خزانے سے خرچ کی جانے والی رقم کا بہترین استعمال ہو۔ وزیرِ اعظم نے کہا کہ ماضی میں سبسڈٰ ی کے نظام میں موجود خامیوں کو دور کرنے کی ضرورت کو یکسر نظر انداز کیا جاتا رہا جس کی وجہ سے ان وسائل سے وہ طبقات بھی فائدہ اٹھاتے رہے جو اس کے مستحق نہیں تھے۔ وزیرِ اعظم نے معاون خصوصی برائے سماجی تحفظ، سیکرٹری خزانہ، یوٹیلیٹی اسٹورز کارپوریشن کو ہدایت کی کہ غریب اور کم آمدنی والے طبقات کی بنیادی اشیائے ضروریہ کے حوالے سے ٹارگیٹڈ سبسڈی کی فراہمی کی تجاویز کو جلد از جلد حتمی شکل دی جائے۔دوسری جانب وزیراعظم عمران خان نے وفاقی اداروں کو کراچی کے شہریوں کو ہر ممکن ریلیف فراہم کرنے کی ہدایت کر دی ہے۔وزیراعظم عمران خان نے کراچی میں حالیہ بارشوں سے پیدا ہونے والی صورت حال میں این ڈی ایم اے اورپاک فوج کے اقدامات کی تعریف کی ہے۔ انہوں نے وفاقی اداروں کو کراچی کے شہریوں کو ہرممکن ریلیف فراہم کرنے کی ہدایت کردی ہے۔وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ کراچی اوراس کے عوام کوتنہا نہیں چھوڑیں گے، وفاقی ادارے اپنے تمام وسائل بروئے کارلائیں۔ دوسری طرف وزیراعظم عمران خان نے ٹائیگر فورس کے نوجوانوں سے پبلک سروسز کی نگرانی اور بہتری کے لیے ٹائیگر فورس سے مدد لینے کا فیصلہ کر لیا ۔وزیراعظم عمران خان کی زیر صدارت ایک اجلا س ہوا جس میں ٹائیگر فورس ای گورننس پلان پر مشاورت کی گئی جس میں معاون خصوصی عثمان ڈار نے مستقبل کی منصوبہ بندی پر مبنی جامع منصوبہ وزیراعظم کو پیش کیا۔وزیر اعظم نے ٹائیگر فورس کے ذریعے ای گورننس سسٹم لانے کی منظوری دے دی جس کے بعد اب ٹائیگر فورس کے نوجوان مقامی سطح پر گورننس کے معاملات کو رپورٹ کر سکیں گے۔ٹائیگر فورس کی جانب سے اشیائے ضروریہ کی قیمتوں اور صحت کی سہولیات سے متعلق بھی حکام کو آگاہ کیا جائے گا جبکہ پناہ گاہوں، مارکیٹوں، تعلیمی اداروں اور عوامی مقامات پر سروسز کی فراہمی رپورٹ ہو گی ٹائیگر فورس کے ارکان تھانے، کچہری، لینڈ ریکارڈ، بجلی چوری اور عوامی شکایات پر بھی نظر رکھ سکیں گے

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close