کشمیر

کشمیری طیب اردگان کوسلام پیش کرتے ہیں،چوہدری یاسین

اسلام آباد:آزاد کشمیر قانون ساز اسمبلی میں قائد حزب اختلاف چوہدری محمد یاسین نے اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی سے ترک وزیراعظم طیب اردگان کی طرف سے اہل کشمیر کے حقوق کے لئے آواز بلند کرنے پر انکا تہہ دل سے شکریہ ادا کیا انہوں نے کہا کہ پوری کشمیری قوم ترک صدر طیب اردگان کی مسئلہ کشمیر پر کاوشوں کو سلام پیش کرتی ہے اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل ترک صدر طیب اردگان کی تجویز پر استصواب رائے کروانے کے لیے اقدامات اٹھائے آج یہاں سہینیر اخبار نویسوں سے گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہ کہا کہ اقوام متحدہ نے ستر سال قبل قرا دادیں منظور کی تھیں بوجوہ ان پر اتنا عرصہ گزر جانے کے باوجود عملدرآمد نہیں ہوسکا مقبوضہ کشمیر میں نو لاکھ بھارتی افوج کشمیری عوام پر دنیا کے خطرناک ترین ہتھیاروں کے ذریعے ظلم و ستم ڈھا رہی ہے گزشتہ ایک سال سے زائد عرصہ سے لاک ڈان کے ذریعے کشمیریوں کی زندگی مشکل بنادی گئی ہے، ہزاروں افراد شہید،زخمی اور لاپتہ ہیں، یہ مسئلہ خطے کے امن کے لئے خطرہ ہے، ایسے میں اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل انتو نیو گوتریس ذاتی دلچسپی لے کر مسئلہ کشمیر کے حل کے لئے اقوام متحدہ کی قرار دادوں پر عملدرآمد کرائیں، اس مسئلے کا حل طلب چلا آناخطے کے امن کے لئے خطرات کا باعث ہے، انہوں نے کہا کہ ہندوستان کشمیر میں بدترین جنگی جرائم کا مرتکب ہورہا ہے، اور دنیا کو اس کا نوٹس لینا چاہیے، ہندوستانی فوج کشمیریوں کو جعلی پولیس مقابلوں میں شہید کر رہی ہے انھیں اظہار رائے کی آزادی سے محروم کیا جارہا ہے اس لئے غیر انسانی رویہ دنیا کو مسترد کرنا چاہیے اور امن اور استحکام کی خاطر مسئلے کے حل کے لئے فوری اقدامات کرنے چاہیے

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close