کشمیر

رول آف لاء پر کوئی سمجھوتہ نہیں ہوگا،جسٹس راجہ سعید اکرم

مظفرآباد:قائم مقام چیف جسٹس آزادجموں وکشمیر جسٹس راجہ سعید اکرم خان نے کہا ہے کہ بار اور بینچ کے مضبوط تعلق سے ہی آئین و قانون کی بالا دستی اور عوام کو سستے انصاف کی فراہمی ممکن ہو سکتی ہے۔ وکلاء اور عدلیہ دونوں قانون کے محافظ ہیں، رول آف لاء پر کوئی سمجھوتہ نہیں ہوگا۔ وکلاء کے مسائل عدلیہ کے مسائل ہیں۔ وکلاء عدلیہ کی شان اور عدلیہ کی عزت وکلاء سے ہے۔وکلاء عدالتوں کے کسٹوڈین ہیں ، چیف جسٹس نے سنٹرل بار ایسوی ایشن کے نو منتخب عہدیداران سے حلف لیا۔ ان خیالات کا اظہار قائم مقام چیف جسٹس آزادجموں وکشمیر جسٹس راجہ سعید اکرم خان نے سموار کے روز سنٹرل بار ایسوسی ایشن کے نو منتخب عہدیداران کی تقریب حلف برداری سے مہمان خصوصی خطاب کرتے ہوئے کیا ۔حلف برداری کی تقریب سے سابق چیف جسٹس چوہدری محمد ابراہیم ضیاء،،وائس چیئرمین بار کونسل خواجہ مقبول وار ، صدر سنٹرل بار ایسوسی ایشن راجہ آفتاب ایڈووکیٹ ، سیکرٹری جنرل وحید بشیر اعوان ایڈووکیٹ ، سابق صدر سنٹرل بار ایسو سی ایشن ناصر محمود مغل ، چوہدری الطاف ایڈووکیٹ اور دیگر مقررین نے بھی خطاب کیا جبکہ اس موقع پر چیئرمین سروس ٹریبونل خواجہ محمد نسیم ، ممبر سروس ٹریبونل راجہ منظور خان، ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن ججز، قاضی صاحبان ،سپریم کورٹ بار ، ہائی کورٹ بار کے عہدیداران ، سنٹرل بار کے اراکین و عہدیداران ،سینئر وکلاء ،خواتین وکلاء اور سول سوسائٹی کی کثیر تعداد موجود تھی۔ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے چیف جسٹس نے کہا کہ وکلاء اور عدلیہ مل کر اس ادارے کے وقار اور عزت میں اضافہ کریں۔ انہوں نے کہا کہ آئین اور قانون کے تحت کام کریں گے ،جو حلف اٹھایا ہے اسکے مطابق کام کریں گے۔ انہوں نے کہا کہ عزت اور ذلت اللہ کے ہاتھ میں ہے۔ عدلیہ کے وقار کو مضبوط کر نے کے لیے وکلاء کردار ادا کریں ۔ انسان میں خرابیاں بھی ہوتی ہیں ،کوئی فرشتہ نہیں ہوتا لیکن آئین اور قانون سے تحت فیصلے کریں گے ۔ انہوں نے کہا کہ عدلیہ کے وقار اور عزت کو سامنے رکھتے ہوئے فیصلے ہوں گے۔ حلف براداری کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے سابق چیف جسٹس چوہدری محمد ابراہیم ضیاء نے کہا کہ آئین وقانون کی بالا دستی کے لیے بار اور بینچ ایک ہونے سے ہی انصاف کی فراہمی ممکن ہے۔ انہوں نے کہا کہ عام آدمی کو انصاف کی فراہمی اور عدلیہ کے وقار میں اضافہ کے لیے بار اور بینچ کو متحد ہونے کی ضرورت ہے۔انہوں نے کہا کہ وکلاء عدلیہ کے وقار اور قانون کی بالا دستی کے لیے اپنا کردار ادا کریں ۔ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے صدر سنٹرل بار ایسوی ایشن راجہ آفتاب خان ایڈووکیٹ نے کہا کہ رول آف لاء اور انصاف کی فراہمی کی فراہمی کے لیے بار اور بیچ کا گہرا تعلق ہے۔ انہوں نے کہا کہ عدلیہ کے وقار، اداروں کی مضبوطی اور عوام کے حقوق کے تحفظ کے لیے وکلاء اپنا بھرپور کردا ر ادا کرتے رہیں گے۔

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close